Tag Archives: yaad

Lost memories…

تیرا خیال اڑھا کے، سلا گئیں یادیں

سلا کے خواب میں، ملا گئیں یادیں

 

پھر یاد آ گئی، وہی تیری بے رخی

اسی یاد سے ہم کو، جلا گئیں یادیں

 

جو دن بھولے تھے، بڑی مشکل سے

وہ وقت پھر ہمیں، دیکھا گئیں یادیں

 

وہ ہم سے پوچھیں، آپ  کیوں ہیں روتے؟

ہم  خود  نہیں  روتے، بس رلا گئیں یادیں

 

استاد  کا طریقہ؟  بس سفر کا سلیقہ

چلا پھر واں جہاں،  بلا گئیں یادیں

I use your remembrance

As a blanket

So when I sleep

I can meet you in my dreams

 

And so I am reminded

Of you turning away

That memory

Burns bright

 

I forgot that day

With a lot of effort

Yet my memory

Reminds me of that time

 

And they ask

Why do you weep so

I say I do not weep

My memory makes me do so

 

So what is his way?

Nothing more than

Walking the middle path

He goes wherever his thoughts take him

 

Advertisements

Leave a comment

Filed under Ghazal, Poetry

Remembrance

جو کوئی بات دکھاتی ہے، وہی یاد آتی ہے

سرد  رات  ستاتی  ہے،  وہی یاد آتی ہے

When something hurts me

I am reminded of her

Winter nights

Remind me of her

 

بارہا چاند  میں  بھی  نظر  آتی  ہے

چاندنی لبھاتی ہے، وہی یاد آتی ہے

Oftimes, I see her in the moon

I like the moonlight

Though it does

Remind me of her

 

غور  سے  دیکھی  نہرِ جان  کی روانی

موجِ غم آتی جاتی ہے، وہی یاد آتی ہے

I see the river of time

Waves of joy and sorrow

One after the other

Remind me of her

 

رو رو نکال دوں زندگی سے یاد اسکی

زندگی  رلاتی  ہے،  وہی  یاد  آتی ہے

I would have wept away

Her memory

Sadly the tears

Bring back more memories

 

ایسے ہی کسی موسم میں ہم ملے تھے

یہ  رت  جلاتی  ہے،  وہی یاد آتی ہے

I remember it was similar weather

When we met

I hate this weather now

It reminds me of her

 

کاوش کی بھولنے کی غمِ دنیا لے کے

ایسے یاد جاتی ہے؟  وہی یاد آتی ہے

So I tried to forget her

Looking at the world’s sorrows

It was a fool’s errand

It does not remove memories

 

یہ غزل  ختم  تو  محفل  ختم  استاد

شمع ٹمٹماتی ہے،  وہی یاد آتی ہے

The words end

And so do the night’s revelries

The candle flickers

It reminds me of her

 

7 Comments

Filed under Ghazal, Poetry

The First Submission

اولین  داغِ  سجدہ کسے یاد  ہے؟

ٱلنَّاسُ  أُمَّةً  وَٰحِدَةً  کسے یاد ہے؟

Who remembers

The first submission

All people were one nation

Who remembers that?

 

یاد  ہیں  بس   مجبوریاں  اپنی

کرنا کوئی حق ادا، کسے یاد ہے

All that I remember

Are my limitations

I do not remember

To fulfill my duties

 

ظالمینِ  طائف  کے  لیے دعا

حلیمانا وہ ادا، کسے یاد ہے؟

The incident at Taif

The prayer for Taif

Who recalls

That grace

 

جبرِ غیر ہم تو بھولتے نہیں

کریم اپنا خدا، کسے یاد ہے

And we do not forget

The insults heaped on us

By strangers

Who recalls the merciful?

 

خطبہِ پردہِ طوفانی سا ہے

نظر کا پردہ، کسے یاد ہے؟

His orders concerning Pardah

Are fire and brimstone

Who recalls

The concept of modesty?

Leave a comment

Filed under Ghazal